فیس بک پیج سے منسلک ہوں

اماراتی ولی عہد کا مختصر دورہ پاکستان,12 ارب ڈالرز کے پیکج پر بات چیت

اسلام آباد پالیٹکس رپورٹ /معظم رضا تبسم : متحدہ عرب امارات کے ولی شیخ محمد مختصر دورہ پاکستان کے بعد واپس روانہ ہوگئے ہیں۔ ذرائع کے مطابق شیخ محمد بن زید النہیان کے دورہ پاکستان کے موقع پر متحدہ عرب امارات پاکستان کیلئے تقریباً 12 ارب ڈالرز کے پیکج پر بات چیت ہوئی۔

متحدہ عرب امارات کے ولی عہد محمد بن زید ایک روزہ دورے پر اتوار کو وزیراعظم عمران خان کی دعوت پراسلام آباد پہنچے تھے-

وزیراعظم ہاوس میں اماراتی ولی عہد شیخ محمد بن زیدالنہیان اور وزیراعظم عمران خان کے درمیان ون آن ون ملاقات ہوئی جس میں پاکستان اور یواے ای تعلقات، خطے کی صورت حال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ وزیراعظم عمران خان اور شیخ محمد کی سربراہی میں متحدہ عرب امارات اور پاکستان کے درمیان وفود کی سطح پر بھی مذاکرات ہوئے۔ دفتر خارجہ کے مطابق پاکستان اورامارات کی اعلیٰ قیادت کے درمیان 3 ماہ میں ہونے والی یہ تیسری ملاقات ہے۔

ذرائع کے مطابق یو اے ای 3 سال میں پاکستان کو لگ بھگ ساڑھے 9 ارب ڈالر کا ادھار تیل،3 ارب ڈالر کا آسان شرائط پر قرضہ فراہم کریگا اور 3 ارب ڈالر اسٹیٹ بینک میں رکھوائے جائیں گے جبکہ مختلف شعبوں میں ہونے والی سرمایہ کاری اس کےعلاوہ ہے۔

اس سے قبل اماراتی ولی عہد کا اسلام آباد پہنچنے پر ریڈ کارپٹ استقبال کیا گیا جب کہ وزیراعظم عمران خان نے خود ان کا نورخان ایئربیس پر استقبال کیا۔ وزیراعظم عمران خان خود گاڑی چلا کر مہمان کے ساتھ نورخان ایئربیس سے وزیراعظم ہاؤس گئے، متحدہ عرب امارات کے ولی عہد شیخ محمد بن زیدالنہیان کو 21 توپوں کی سلامی دی گئی اور وزیراعظم ہاؤس پہنچنے پر گارڈ آف آنر پیش کیا گیا۔اس موقع انہوں نے جے ایف تھںڈر 17 بمبار طیارے کی فضائی پریڈ بھی دیکھی۔