فیس بک پیج سے منسلک ہوں

نیئر بخاری کی رہائشگاہ پر تجاوزات کیخلاف آپریشن, بلاول بھٹو نے سیاسی انتقام قرار دیدیا

اسلام آباد پالیٹکس رپورٹ / معظم رضا تبسم : سی ڈی اے نے قائداعظم یونیورسٹی کی اراضی پر تجاوزات کیخلاف آپریشن کے دوران سابق چیئرمین سینیٹ نیئر حسین بخاری کی رہائش گاہ کے باہر عارضی طور پر تعمیر باتھ رومز اور کمرے کو گرا دیا- سابق صدر آصف علی زرداری اور چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو  زرداری نے قرار دیا ہے کہ سیکریٹری جنرل پیپلز پارٹی کو انتقام کا نشانہ بنایا جا رہے ہے-

سابق صدر آصف علی زرداری نے نیر بخاری کے گھر پر اپریشن کی مذمت کی ہے- آصف زرداری نے کہا ہے کہ حکومت بوش کے ناخن لے ۔آپریشن کے آڑ میں نیر بخاری کے گھر پر حملہ کیا گیا ہے ۔نیر بخاری کے پاس تمام ملکیتی دستاویزات ہیں ۔آصف زرداری نے کہا ہے کہ اس طرح کے ہتھکنڈے سیاسی بلیک میلنگ ہے اتقامی کاروائیوں سے نیر بخاری ڈرنے والا نہیں ہے -

بلاول بھٹو زرداری نے فوری ردعمل میں کہا ہے نیر بخاری کے گھر پر آپریشن شرمناک ہے ۔ بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ نیر بخاری کے گھر پر آپریشن سیاسی دباؤ کا ہتھکنڈا ہے بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ آپریشن کرنا ہے تو بنی گالا میں کیا جائے ۔بنی گالا میں عمران خان کے گھر کی تعمیر غیر قانونی ہے ۔

بلاول بھٹو نے کہا کہ ایک نہیں دو پاکستان بنائے جا رہے ہیں ۔بلاول بھٹو زرداری ۔نیر بخاری کے گھر پر آپریشن سیاسی آواز دبانے کے ہے-