فیس بک پیج سے منسلک ہوں

سینٹ اجلاس: حکومت آئی ایم ایف مذاکرات پر اعتماد میں لے, اپوزیشن

اسلام آباد پالیٹکس رپورٹ / معظم رضا تبسم :اپوزیشن نے آئی ایم ایف سے مذاکرات پر ایوان کو اعتماد میں لینے کا مطالبہ کردیا_

جمعہ کو سینیٹ میں پیپلزبپارٹی کی پارلینانی لیڈر شیری رحمان نے کہا کہ اطلاعات کے مطابق آئی ایم ایف کی ٹیم آئی ہے، وزیر خزانہ ایک ٹاک شو میں اقتصادی حالات بتا رہے تھے، شیری رحمان نے کہا کہمہنگائی میں خوف ناک اضافہ ہو رہا ہے، پارلیمان کو اعتماد میں لینے کی بجائے ٹاک شوز میں بیٹھ کر بات کی جا رہی ہے،بتایا جائے کہ آئی ایم ایف کی کیا شرائط ہیں-

شیری رحمان نے کہاکیا حکومت آئی ایم ایف کی مزید شرائط منظور کر کہ ایک اور بم گرانے جا رہی ہے؟ مہنگائی میں خوفناک اضافہ ہو رہا ہے,پاکستان کا سب سے بڑا مسئلہ معاشی بحران ہے, حکومت کو نوے دن ہونے والے ہیں کیا اقدامات لئے جا رہے-

شیری رحمان نے کہا کہ ینظیر انکم سپورٹ پروگرام کا نام تبدیل کرنے کی ایک بار پھر کوشش کی جا رہی ہے، سینیٹ میں کوئی جواب دینے کو تیار نہیں_آئی ایم ایف سے کن شرائط پر بات کی جا رہی ہے؟ اقتدار میں آنے سے قبل وعدے کئے گئے تھے،آج تو وزیراعظم وزیراعظم ہاوس اور صدر ایوان صدر میں رہ رہے ہیں، ہر ایک اپنی اپنی جگہ پر رہ رہے ہیں_دوسروں پر تنقید کی گئی، آپ کے اپنے نیب زدہ وزراء گھوم رہے ہیں_