فیس بک پیج سے منسلک ہوں

بلاول بھٹو کو اپوزیشن لیڈر بنوانے کیلئے پیپلزپارٹی نے تاحال کوئی سیاسی رابطے نہیں کئے

اسلام آباد پالیٹکس رپورٹ/ معظم رضا تبسم : پاکستان پیپلزپارٹی نے چئیرمین بلاول بھٹو زرداری کو قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر بنانے بارے کسی سیاسی جماعت سے تاحال رابطہ کوئی نہیں کیا۔ واضح رہے کہ 25 جولائی انتخابات کے بعد ن لیگ ، ایم ایم اے اور قوم پرست پختون جماعتوں نے انتخابی دھاندلیوں کے خلاف احتجاجا اسمبلیوں سے حلف نہ لینے اور نہ دوسری جماعتوں کو حلف لینے دینے کا اعلان کیا تھا جس پر پی پی نے اعلی سطحی اجلاس کے بعد حلف نہ لینے کی حامی سیاسی جماعتوں کو پارلیمنٹ میں لانے کے لئے سات رکنی رابطہ کمیٹی بنائی تھی جس نے اسلام آباد میں دو روز میں ملاقاتوں کے بعد بھرپور کوششوں سے ان سیاسی جماعتوں کو پارلیمنٹ میں جانے اور حلف اٹھا کر پارلیمانی کردار ادا کرنے پرراضی کرلیا۔
“اسلام آباد پالیٹکس “کے استفسار پر پیپلزپارٹی پارلیمنٹرین کے سیکرٹری جنرل فرحت اللہ بابر نے بتایا کہ پی پی کی بنائی گئی کمیٹی کے ایجنڈا میں چئیرمین بلاول بھٹو کو اپوزیشن لیڈر بنانے کے لئے سیاسی جماعتوں سے بات چیت شامل تھی اور نہ ہی ان رابطوں کے دوران اس بارے کوئی ذکر ہوا۔