فیس بک پیج سے منسلک ہوں

شکیل آفریدی کا جیل سے فرار: سی آئی اے کا منصوبہ آئی ایس أئی نے ناکام بنا دیا

اسلام آباد پالیٹکس رپورٹ:  پاکستان کی انٹیلی جنس ایجنسی آئی ایس آئی نے ڈاکٹر شکیل آفریدی کو پشاور جیل سے فرار کرانے کا امریکی سی آئی اے کا منصوبہ ناکام بنادیا۔

روسی خبررساں ادارے کے مطابق امریکا نے اسامہ بن لادن کا سراغ لگانے والے ڈاکٹر شکیل آفریدی کو چھڑانے کے بدلے پاکستان کو ڈاکٹر عافیہ صدیقی کی رہائی کی پیشکش کی تھی تاہم پاکستان نے ایسا کرنے سے انکار کردیا۔ روسی ویب سائیٹ کے مطابق واشنگٹن نے ڈاکٹر شکیل کو امریکا کے حوالے کرنے کے لیے پاکستان سے درخواست بھی کی جب کہ امریکی صدر ٹرمپ کی جانب سے کیے گئے مطالبات میں سے ڈاکٹر شکیل آفریدی کی رہائی کا معاملہ سرفہرست تھا۔

روسی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ امریکی خفیہ ادارے سی آئی اے نے ڈاکٹر شکیل آفریدی کو پشاور کی جیل سے فرار کرانے کا منصوبہ بھی بنایا تھا تاہم پاکستانی خفیہ ادارے آئی ایس آئی نے سی آئی اے کے اس منصوبہ کو ناکام بنادیا، سی آئی اے کے لیے کام کرنے والے مقامی مخبر نے اس منصوبہ کے بارے میں آئی ایس آئی کو آگاہ کردیا جس پر کارروائی کرتے ہوئے ڈاکٹر شکیل آفریدی کو پشاور جیل سے نامعلوم مقام پر منتقل کردیا گیا۔

ڈاکٹر شکیل آفریدی کو اسامہ بن لادن کی ہلاکت کے بعد حراست میں لیا گیا تھا، شکیل آفریدی پر الزام ہے کہ انہوں نے سی آئی اے کو اسامہ بن لادن کا سراغ لگانے میں مدد کی تھی اور سی آئی اے کے ایما پر اسامہ بن لادن کے خون کا نمونہ حاصل کرنے کی کوشش بھی کی تھی۔