فیس بک پیج سے منسلک ہوں

حکومت سالانہ اہداف حاصل کرنے میں ناکام رہی، ادارہ شماریات کی رپورٹ

اسلام آباد پالیٹکس رپورٹ: مسلم لیگ ن کی حکومت جی ڈی پی ،صنعتی ترقی اور فی کس آمدنی کے سالانہ اہداف حاصل کرنے میں ناکام رہی، فی کس آمدنی ، صعنتی ترقی، جی ڈی پی میں کمی کا سامنا رہا
ادارہ شماریات نے عبوری اعداد و شمار جاری کر دیئے جس کے مطابق مالی سال 18 -2017 کے دوران معاشی میدان میں حکومت کے کتنے نشانے ٹھیک لگے اور کتنے اہداف پورے نہ ہو سکے ۔
رواں مالی سال معاشی ترقی کا تیر نشانے پر نہ لگا، سالانہ 6 فیصد ہدف کے مقابلے میں جی ڈی پی گروتھ 5.79 فیصد کمی کا سامنا رہے گا۔
ملکی معیشت کیلئے ریڑھ کی ہڈی زراعت کا شعبہ اپنے ہدف 3.5 میں صرف 2۔0 فیصد معمولی اضافہ ہوا۔
صنعتی شعبے کا ہدف تو تھا 7.3 لیکن یہاں نشانہ خطا ہوگیا۔ اس کی کارکردگی 5.8 فیصد رہے گی، سیمنٹ۔ ٹریکٹرز۔ ٹرک اور پیٹرولیم کے شعبے میں نمایاں بہتری رہی البتہ تمام تر حکومتی دعووں کے باوجود بجلی اور گیس کے شعبے میں صرف 1.84 فیصد ہی بہتری آسکی۔
فی کس آمدنی کا ہدف رواں سال بھی پورا ہوتا نظرنہیں آ رہا۔ ایک لاکھ 88ہزار 626 کے مقابلے میں فی کس آمدنی ایک لاکھ 80 ہزار 204 روپے رہے گی۔