فیس بک پیج سے منسلک ہوں

نوازشریف سیاست سے باہر، عمران خان کی پارٹی میں زلزلہ آنے والا

اسلام آباد پالیٹکس رپورٹ :چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری کا کہنا ہے کہ نوازشریف سیاست سے باہر، عمران خان کی پارٹی میں زلزلہ آنے والا ہے ، عمران خان کا آخری میرا پہلا الیکشن ہوگا ، الیکشن کمیشن پاورفل ہوا تو اعتراضات نہیں ہونگے۔
ملتان میں میڈیا سے بات چیت اور جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے چیئرمین پی پی پی بلاول زرداری کا کہنا تھا کہ ہمارے مخالفین کہتے ہیں کہ انہوں نے بہت کام کئے، نوازشریف نے اپنے 3 ادوار میں ایک میٹرو کے علاوہ کیا کام کیا، لوڈ شیڈنگ کے خاتمے کے دعویدار بتائیں کہ ملک میں توانائی بحران کب اور کہاں ختم ہوا؟ صرف رائیونڈ میں لوڈ شیڈنگ ختم ہونے کا مطلب یہ نہیں کہ پاکستان میں لوڈ شیڈنگ ختم ہوگئی، (ن) لیگ نے زراعت اور ٹیکساٹئل سیکٹر کو چن چن کر تباہ کیا، ملک میں میٹرو یا کیوں نکالا کی ضرورت نہیں بلکہ پانی، غربت، تعلیم اور روزگار عوام کے مسائل ہیں جن کا وہ حل چاہتے ہیں۔
چیئرمین پی پی نے کہا میں سمجھتا ہوں (ن) لیگ کی سیاست ختم اور نوازشریف ہمیشہ ہمیشہ کے لئے باہر ہوگئے ہیں، اب (ن) لیگ (ش) لیگ بن چکی ہے، اب2018 میں ہمیں مسلم لیگ (ش) اور پی ٹی آئی کے خلاف لڑنا ہے، دونوں جماعتوں کی سیاست معیشت، منشور اور نظریہ ایک ہی ہے، ایک کو نکال کر دوسرے کو واپس لائے تو پالیسی نہیں بدلے گی۔ ان کا کہنا تھا کہ ضمنی انتخابات کے نتائج سے عام انتخابات کا موازنہ نہیں کرنا چاہئے، الیکشن کمیشن پاورفل ہوگا تو الیکشن پراعتراضات نہیں ہوں گے۔
بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ پاکستان کا نظامِ احتساب فراڈ ہے ہم چاہتے ہیں کہ تمام افراد کا احتساب برابری کی بنیاد پر اور تمام پاکستانیوں کے لئے ایک قانون ہو، (ن) لیگ کے لئے وی آئی پی قانون نہ ہو۔ پیپلزپارٹی نے ہمیشہ عوامی مفاد کے لئے اقدامات اٹھائے اور بالخصوص جنوبی پنجاب پر خاص توجہ دی، ہم نے جنوبی پنجاب کو صوبہ بنانے کی بات اس کی پسماندگی دور کرنے کے لئے کی، کسانوں، غریبوں، مزدوروں کو ان کے حقوق دلوائے اور کسی ایک شہر پر فوکس نہیں کیا بلکہ سندھ کے تمام اضلاع سے تعلق رکھنے والے 6 لاکھ خاندانوں کو غربت سے نکالا اور غریبوں کو بلاسود قرضے دیئے لیکن شو بازی نہیں کی۔