فیس بک پیج سے منسلک ہوں

ن لیگ کی چھتری سے اڑان : پی پی اور پی ٹی آئی میں شمولیت

اسلام آباد پالیٹکس رپورٹ / معظم رضا تبسم : مسلم لیگ (ن) کے 2 ایم این اے پارٹی چھوڑ گئے، بھون داس پیپلزپارٹی میں شامل جب کہ رمیش کمار نے تحریک انصاف کو جوائن کرلیا۔ رمیش کمار نے چوہدری نثار علی خان اورمزید ن لیگی ارکان اسمبلی کے مسلم لیگ ن چھوڑنے اور اپوزیشن جماعتوں میں شمولیت کا امکان ظاہر کیا جا رہا ہے۔
پاکستان پیپلز پارٹی نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر بھون داس کی پیپلز پارٹی میں شمولیت کا اعلان کیا۔ جبکہ اسلام آباد میں اپنی رہائش گاہ پر چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے مسلم لیگ (ن) کے رکن قومی اسمبلی رمیش کمار نے تحریک انصاف میں باقاعدہ شمولیت کا اعلان کیا۔ رمیش کمار کا کہنا تھا کہ پاناما کیس کے بعد اداروں کیلئے جو زبان استعمال کی گئی، اس کا حصہ نہیں بن سکتا تھا۔
ڈاکٹر رمیش کمار نے دعویٰ کیا کہ چوہدری نثار علی خان بھی جلد تحریک انصاف میں شامل ہوں گے۔ انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) میں چوہدری نثارایماندارشخص ہیں اور میں ان کی عزت بھی کرتا ہوں جب کہ وہ کہا کرتے تھے کہ آپ جیسے لوگوں کی پارٹی میں کوئی قدر نہیں ہے۔ اس پر عمران خان مسکرائے اور بولے ابھی تو پارٹی شروع ہوئی ہے۔

سیاسی ذرائع کا دعوی ہے کہ آنے والے دنوں میں پندرہ سے بیس کے قریب اراکین قومی و صوبائی اسمبلی ن لیگ چھوڑ کر پی ٹی آئی ، پی پی پی اور دیگر جماعتوں میں شمولیت اختیار کرجائیں گے۔