فیس بک پیج سے منسلک ہوں

وزیر اعظم ایمنسٹی اسکیم نفاذ ناکام ہونے کا خطرہ

اسلام آباد پالیٹکس رپورٹ / معظم رضا تبسم : وزیراعظم پاکستان شاہد خاقان عباسی کی اعلان کردہ ٹیکس ایمنسٹی اسکیم نفاذ ناکام ہونے کا خطرہ پیدا ہوگیا ۔ پاکستان تحریک انصاف نے ایمنسٹی اسکیم کیخلاف عدالت جانے فیصلہ کیا ہے جبکہ پیپلزپارٹی  پارلیمنٹ سے نامنظورکرانے کے لئے سرگرم ہوگئی۔

جمعہ کو پاکستان تحریک انصاف نے پاکستانیوں اور اوورسیز پاکستانیوں کے لیے کالا دھن سفید کرنے کے لیے حکومت کی 5 نکاتی ٹیکس ایمنسٹی اسکیم مسترد کرتے ہوئے عدالت سے رجوع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ اس کے علاوہ عمران خان نے معاملہ پارلیمنٹ میں بھی بھرپور انداز سے اٹھانے کی ہدایت کردی ہے۔
سابق چئیرمین سینیٹ اور سینیٹر میاں رضا ربانی نے جمعہ کو پریس کانفرنس کرتے ہوئے ایمنسٹی اسکیم کو قوم کے ساتھ مذاق اور کالا دھن سفید کرنے کی کوشش قرار دیا ہے انہوں نے اعلان کیا کہ وہ پارلیمانی پارٹی میں ایمنسٹی اسکیم کو نامنظوری کی قرارداد کے ذریعے ختم کرنے کی تجویز دیںگے ۔ انہوں نے کہا کہ پارلیمنٹ ایمنسٹی اسکیم کا راستہ روک سکتی ہے ۔

واضح رہے کہ حکومت کی نئی ایمنسٹی پالیسی کے تحت جن پاکستانیوں کے اثاثے ملک سے باہر ہیں وہ2 فیصد جرمانہ ادا کرکے اسے قانونی بناسکتے ہیں، اندرون ملک موجود کالے دھن کو 5 فیصد ادائیگی پر سفید کرایا جاسکے گا، خفیہ پراپرٹی قانونی بنانے کیلئے ایک فیصدکی ادائیگی کرنا ہوگی تاہم سیاستدان اس اسکیم سے فائدہ نہیں اٹھا سکتے۔