ایم کیو ایم پی اور پی ایس پی اتحاد کے پیچھے اسٹیبلشمنٹ

اسلام آباد پالیٹکس رپورٹ: پاک سر زمین پارٹی (پی ایس پی) کے چیئرمین مصطفیٰ کمال نے پاکستانی ذرائع ابلاغ میں جاری خبروں کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ ان کی جماعت اور متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) پاکستان کے اتحاد کے پیچھے اسٹیبلشمنٹ کا ہاتھ ہے۔

کراچی میں اپنے مرکزی دفتر میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے پی ایس پی کے صدر مصطفیٰ کمال کا کہنا تھا کہ یہ تاثر دیا جارہا ہے کہ ہم اسٹیبلشمنٹ کے لوگ ہیں اور ڈاکٹر فاروق ستار مجبوراً یہ کام کر رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ہم خبروں کو لیک کرنے والے نہیں بلکہ صاف صاف بات کرنے والے لوگ ہیں۔

انہوں نے کہا ہمیں ڈاکٹر فاروق ستار نے بلایا تھا اور وہ پریس کانفرنس کرنے کے لیے پہلے سے وہاں موجود تھے اور اب تک جو کچھ بھی ہوا وہ سب ڈاکٹر فاروق ستار کی خواہش پر ہوا۔مصطفیٰ کمال نے کہا کہ اگر میں اسٹیبلشمنٹ کا آدمی ہوتا تو وہ ایم کیو ایم رہ کر ہی یہ کام کر لیتے، اپنی جماعت اور عہدہ چھوڑنے کی ضرورت نہیں تھی۔ پی ایس پی سربراہ نے کہا کہ ملکی مفاد کے لیے انہوں نے ڈاکٹر فاروق ستار کو پی ایس پی ختم کرنے کی بھی پیشکش کی تھی۔