اجازت ملے یا نہ ملے یاد گارِ شہداء جائیں گے ۔ فاروق ستار

کراچی: متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) پاکستان کے سربراہ ڈاکٹر فاروق ستار کا کہنا ہے کہ قافلے کی صورت میں یادگار شہداء جائیں گے لیکن اگر کارکنان اور شہداء کے لواحقین وہاں آئے تو وہ ان کی عقیدت ہوگی۔

خیال رہے کہ شہری انتظامیہ کی جانب سے ایم کیو ایم پاکستان کی رابطہ کمیٹی کو کراچی کے جناح گراؤنڈ میں موجود یاد گارِ شہداء جانے کی اجازت دے دی گئی تھی، تاہم عوام اور کارکنان کو جانے کی اجازت نہیں دی تھی اور اس حوالے سے انتظامیہ کی جانب سے راستوں کو کنٹینرز لگا کر بند کردیا گیا ہے۔

کراچی کے علاقے بہادر آباد میں ایم کیو ایم پاکستان کے مرکزی دفتر کے باہر میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے فاروق ستار کا کہنا تھا کہ حکومت رابطہ کمیٹی کی حفاظت کو یقینی بنائے۔

انہوں نے کہا کہ انہوں نے دو روز قبل اعلان کیا تھا کہ وہ پارٹی کے شہداء کو خراض تحسین پیش کرنے کے لیے یاد گارِ شہداء جائیں گے چاہے انہیں اس کی اجازت ملے یا نہ ملے۔

ڈاکٹر فاروق ستار کا کہنا تھا کہ ان کے کارکنان کو ان کی جمہوری آزادی کے تحت یاد گارِ شہداء آنے کی اجازت دی جائے اور منع کرنے کے باوجود وہاں آنے والے کارکنان کے ساتھ اچھا سلوک کیا جائے۔